Qasas ul Quran – Hazrat Yusuf (Part 11)

data-full-width-responsive="true">

حضرت یوسف علیہ السلام ۔ پارٹ 11

 

خواب کی تعبیر بتانے کے بعد یوسف علیہ السلام نے ساقی سے کہا تھا کہ تم بری ہو جاؤ گے لہٰذا اپنے بادشاہ سے مجھ پر جھوٹے الزام کا ذکر کرنا۔
شیطان نے ساقی سے رہائی کی مستی میں یہ وعدہ بھلا دیا۔ اوریوں یوسف علیہ السلام کو چند سال مزید قید کی سختیوں میں دن گزارنے پڑ گئے۔
شیطان کا بھلوانا اتفاق نہ تھا ۔ اصل میں انسانوں سے مدد لینا ہرگز غلط نہیں ہے۔ لیکن یوسف علیہ السلام چونکہ نبی تھے، ان کا یہ عمل اللہ نے مناسب نہ سمجھا۔ لہٰذا مزید قید اللہ کی مرضی سے تھی۔
اب اس وقت کے فرعون کا نام رایان یا آیونی بتایا جاتا ہے۔
یوسف علیہ السلام اب قید میں ہی تھے کہ فرعون نے ایک خواب دیکھا کہ 7 موٹی گائیں ہیں اور 7 دبلی گائیں۔ اور دبلی گائیں موٹی گائیوں کو نگل رہی ہیں۔ اور 7 سرسبز اور شاداب گندم کی بالیں ہیں اور اور 7 خشک بالیاں۔ اور خشک بالیوں نے سرسبز بالیوں کو کھا لیا۔
صبح بادشاہ جب اٹھا تو اس خواب سے بہت پریشان ہوا۔ اور فوراً دربار کے کاہنوں سے اپنے خواب کی تعبیر چاہی۔ درباری بھی سن کر فکر میں پڑ گئے۔ بہت کوشش کی، لیکن بادشاہ کے خواب کی کوئی تعبیر نہ نکال سکے۔ اور بلاخر تھک ہار کر کہنے لگے بادشاہ سلامت! یہ خواب نہیں بلکہ بے معنی پریشان کن خیالات ہیں۔

جاری ہے۔۔۔

 

 

Click Here For Qasas ul Quran All Parts

data-full-width-responsive="true">

Check Also

Hayrat Angaaz Report in Urdu

data-full-width-responsive="true"> data-full-width-responsive="true">